آریان کو ضمانت ملنے کے بعد شاہ رخ کی آنکھوں میں خوشی کے آنسو آگئے، وکیل



منشیات کیس میں گرفتاری کے بعد آج ضمانت پانے والے آریان خان کے وکیل نے بتایا ہے کہ جب آریان کو ضمانت ملی تو اس وقت شاہ رخ خان کی آنکھوں میں خوشی کے آنسو آگئے تھے۔ 

واضح رہے کہ 3 اکتوبر سے منشیات برآمدگی کیس میں زیرِ حراست آریان خان سمیت ارباز مرچنٹ اور مونمون دھابیچا کی آج بمبئی ہائی کورٹ نے ضمانت منظور کرلی، انہیں کل کیس کا تفصیلی فیصلہ جاری ہونے کے بعد رہا کیا جائے گا۔

آریان خان کی رہائی سے متعلق ان کے وکیل سابق اٹارنی جنرل مکول روہاتگی کا کہنا تھا کہ جب وہ کیس کی سماعت کے بعد شاہ رخ خان سے ملے تو اس وقت بالی ووڈ سپر اسٹار کی آنکھوں میں خوشی کے آنسو تھے۔ 

وکیل کا کہنا تھا کہ شاہ رخ خان کافی دنوں سے بہت پریشان تھے اور آج پرسکون ہوئے۔

مکول روہاتگی نے بتایا کہ کیس سے متعلق خود شاہ رخ خان بھی نوٹس لکھا کرتے تھے اور وہ ان پر میرے ساتھ بات بھی کرتے تھے۔ 

خیال رہے کہ بھارت کے انسداد دہشت گردی کے ادارے نارکوٹکس کنٹرول بیورو (این سی بی) نے ممبئی میں ساحل کے قریب کروز شپ پر پارٹی کے دوران چھاپا مارکر شاہ رخ خان کے بیٹے آریان خان اور ان کے دوست ارباز مرچنٹ کو گرفتار کرلیا تھا۔

این سی بی کی جانب سے ان پر منشیات رکھنے اور استعمال کرنے کا الزام عائد کیا گیا تھا، جسے پہلے آریان نے مسترد کیا جبکہ بعد میں اس سے متعلق اعتراف بھی کرلیا تھا۔

مذکورہ کیس میں آریان خان نے مجسٹریٹ کی عدالت اور پھر این ڈی پی ایس کی عدالت میں درخواست ضمانت جمع کروائیں اور ان کی یہ دونوں درخواستیں مسترد ہوگئیں جس کے بعد ان کے اہلِ خانہ نے بمبئی ہائی کورٹ سے رجوع کیا تھا۔



شاید آپ یہ بھی پسند کریں